کرہ کی آب و ہوا

Submitted by arifmahi on Sun, 03/16/2008 - 20:33

سائسن دانوں نے اس بات کے نئے ثبوت فراہم کیئے ہیں کہ نصف شمالی کرہ کی آب و ہوا میں مسلسل اضافہ ہو رہا ہے۔
سائنس دانوں کا کہنا ہے کہ کرۂ ارض کے شمالی منطقے میں درجۂ حرات میں جتنا زیادہ اضافہ ہوا ہے بارہ سو برس میں نہیں ہوا تھا۔

نئی تحقیق میں کہا گیا ہے کہ شمال کے تمام خطوں میں نویں صدی کے بعد اتنے طویل عرصے تک اور اس قدر یکسانیت کے ساتھ گرمی بڑھی ہے۔

اس تحقیق سے ماضی میں فراہم کی گئی ان شہادتوں کو تقویت ملتی ہے جن میں کہا گیا تھا کہ عالمی حدت کا تعلق گرین ہاؤس گیسوں کے اخراج سے ہے۔

ایسٹ اینگلیا یونیورسٹی کے تحقیق کاروں نے تازہ ترین نتیجہ نکالنے سے قبل کئی عوامل کو مدِ نظر رکھا اور ماضی کے ریکارڈ پر غور کرنے کے بعد اپنی تحقیق کو عام کیا ہے۔

انہوں نے گزشتہ سات سو پچاس برسوں کے دوران لوگوں کی نجی ڈائریوں کو بھی پڑھا ہے۔

ٹموتھی اوسبورن اور کیتھ بیریفا نے اٹھارہ سو چھپن سے حالیہ برسوں تک کے درجۂ حرات کی پیمائش کی ہے اور بتایا ہے کہ زمین کے وہ کون سے حصے ہیں جہاں گرمی میں اضافہ ہوا ہے۔

تجزیہ سے اس بات کی تصدیق ہوتی ہے کہ کہ سن آٹھ سو نوے سے لیکر سن گیارہ سو ستر تک شمالی نصف کرے میں کافی زیادہ گرمی تھی جبکہ سن پندرہ سو اسی سے اٹھارہ سو پچاس تک کا زمانہ کافی سرد تھا۔

تحقیق کاروں نے کہ نویں صدی سے لیکر اب تک گرمی کا اثر جتنا پھیلاؤ رکھتا ہے اتنا کبھی نہیں رکھتا تھا۔

ان کے مطابق گزشتہ سو برس خاص طور سے اہم ہیں کیونکہ اس عرصے میں گرمی کا پھیلاؤ مسلسل بڑھتا رہا ہے۔

سائنس دانوں نے نیدرلینڈز اور بیلجیئم کے باشندوں کی ڈائریوں سے بھی مدد لی ہے جن میں سات سو پچاس سال پہلے کے واقعات درج تھے۔ ان میں ایسے واقعات کا ذکر بھی تھا کہ وہ کونسا سال تھا جب نہریں جم گئی تھیں۔

پرفیسر جون واٹرہاؤس جو رسکن یونیورسٹی میں ماحولیاتی سائنسوں کے تحقیقی سینٹر کے ڈائریکٹر ہیں کہتے ہیں ’یہ درست ہے کہ آج کل ہم درجۂ حرارت کی انتہائی درست پیمائش کر سکتے ہیں لیکن ماضی میں ریکارڈ اتنے درست نہیں تھے جن سے ہم موجودہ پیمائش کا موازنہ کریں۔‘

ان کا کہنا تھا کہ جو ثبوت سامنے لائے گئے ہیں ان سے یہی لگتا ہے کہ گزشتہ ہزار سال میں موجودہ زمانہ گرم ترین ہے۔

Add new comment

CAPTCHA
This question is for testing whether or not you are a human visitor and to prevent automated spam submissions.
Copyright (©) 2007-2018 Urdu Articles. All rights reserved.
Developed By Solaxim Web Hosting and Development Services
Affiliates: Urdu Books | Urdu Poetry | Shahzad Qais | Urdu Jokes One Urdu| Popular Searches | XML Sitemap Partners: UrduKit | Urdu Public Library

Urdu Articles Is One Of The Largest Collection Of Urdu Articles On Different Topics. You can read articles on topics like parenting, relationship, politics, How to do Things, Shopping Reviews, Life Style, Cooking, Health and Fitness, Islam and Spirituality... You can also submit your articles to get free publicity and fame on your published work. Keep Smiling......