وقت کو کیسے بچائیں؟

Submitted by Guest (not verified) on Mon, 02/11/2008 - 17:47

اس دنیا میں بہت سے لوگ ایسے ہیں جو کہ کام کی زیادتی اور وقت کی کمی کا رونا اکثر وبیشتر روتے ہیں۔ وقت ایک ایسی چیز ہے جو کہ ہر امیر، غریب کے پاس یکسا ں موجود ہے۔اور اس بات سے بھی سب ہی بخوبی واقف ہیں کہ ’’وقت کبھی لوٹ کر واپس نہیں آتا ‘‘۔ بات صرف اس کو ٹھیک طور سے استعمال کر نے کی ہے ۔ کچھ لوگ ایسے بھی ہوتے ہیں جو ضروری کام کاج نمٹانے کے بعد اپنی من پسند سرگرمیوں کوبھی سرانجام دے لیتے ہیں۔اور وقت کو گنوانے والوں کے پاس سوائے پچھتا ئوے کے اور کوئی چیز حاصل نہیں ہوتی ۔دنیا میں کامیاب ترین انسانوں کی سب سے بڑی خوبی یہی تھی کہ وہ وقت کی قدر وقیمت سے آگاہ تھے اور اسی وجہ سے وہ کامیاب انسان کہلائے ۔

ہم میں سے اکثر لوگ یہ تمنا کر تے ہیں کہ کاش دن میں کچھ اور گھنٹے ہوتے ، اور ہم اپنے ادھورے کاموںکو مکمل کرسکیںایسا تو ممکن نہیں ہے لیکن میںآج چند ایسی باتیں آپ کو بتائوں گا جس پر اگر آپ عمل کرنا شروع کردیں تو آپ اپنا کافی قیمتی وقت بچا سکتے ہیں۔اور کامیاب ترین انسانوں کی فہرست میں شمار ہو سکتے ہیں۔دنیا بھر کے ماہرین نے وقت کی منصوبہ بندی پر باقاعدہ تحقیق کی ہے اور اس موضوع پر انہوں نے لوگوں کو کئی مفید مشوروں سے نوازا ہے۔

٭سب سے پہلے تو آپ کو اپنے وقت کے مسئلے سے نمٹنے کیلئے سنجیدہ ہونا پڑے گااور اچانک بہت سے گھنٹے کا وقت بچانے کی بجائے اپنی توجہ ان چھوٹی چھوٹی سرگرمیوں پر رکھیں جن سے آپ کے پانچ دس منٹ بچ سکتے ہیں۔کیونکہ اسی وجہ سے آپ کا زیادہ وقت ضائع ہوتا ہے۔ جتنا جلدی اگر کوئی کام کیا جاسکتا ہے تو اس کو جلد مکمل کرنے کی کوشش کریں۔

٭اپنے وقت پر بیدار ہوجائیں اور بستر پر پڑے رہنے ،کی بجائے اٹھ کھڑے ہوں کیونکہ بستر میں فضول قسم کی سوچوں میںرہنے سے آپ کا وقت ضائع ہوگا۔اللہ تعالیٰ نے آپ کو بے کارپیدا نہیں کیا ہے اپنی صلاحیتوں سے آگاہی حاصل کریں اور مثبت کاموں کو سرانجام دیجئے۔

٭ناشتے سے قبل اگر آپ کوئی کام کرنا چاہ رہے ہوں تو وہ ناشتہ کرنے سے پہلے کرلیں کیونکہ ایسا کرنے سے آپ اطمینان سے کھانے سے لطف واندوز ہوسکیں گے۔ناشتہ ضرور کریںچاہے وہ ہلکا پھلکا ہی کیوں نہ ہوچونکہ آپ نے دن بھر مختلف کاموں میں اپنی توانائی کو ہی استعمال کرنا ہے ۔
٭ایسا لباس پہنے سے اجتناب کریں جس پر زیادہ استری کرنے کی ضرورت پڑتی ہو۔ کیونکہ استری کا مسئلہ بھی کئی لوگوں کی مصروفیت پر بری طرح اثر کرتا ہے۔لباس زیادہ قیمتی ہو یا نہ ہو صاف ستھر ا ضرور ہو تاکہ لوگوں پر آپکا اچھا تصور قائم ہو۔

٭شاپنگ کیلئے اس وقت جائیے جب آپ سکون سے خریداری کر سکیں اور بنک کے کام کو جتنا جلدی ہو سکیں کر لیں۔اور ہر قسم کی بلوں کی ادائیگی بروقت کریں تاکہ انتظار کی کوفت نہ اٹھانی پڑے۔

٭اپنی زیر استعمال اشیائ کو ایک جگہ پر رکھیں تاکہ ان کو تلاش کرنے میں وقت ضائع نہ ہو۔

٭کسی سے ملنے جانا ہو یا کسی ہسپتال ، کلینک جائیں تو سب سے پہلے پہنچنے کی کوشش کریں تاکہ انتظار کی نہ کرنا پڑے۔

٭اپنے وزیٹنگ کارڈز یا فالتو کاغذ کی پرچیاں اپنے پاس ضرور رکھیں تاکہ اگر آپ کہیں انتظار کر تے کرتے اکتا جائیں تو اپنا پیغام چھوڑ سکیں۔بہترہوگا کہ آپ وقت لے کر کسی سے ملنے جائیں تاکہ وقت کا ضیاع نہ ہویا پھر اسے اپنی آمد سے آگاہ کردیں۔

٭ضروری کاموں کی تاریخوں کو کلینڈر پر نشان زدہ کر کے کلینڈر کو کسی نمایاں جگہ پر رکھ دیں ایسا کرنے سے آپ اپنا کافی وقت بچاسکتے ہیں۔

٭کسی بڑے کام کو یہ سوچ کر مت ٹالئے کہ اس کیلئے جب کافی زیادہ وقت ملے گا تو کریں گے۔ بہتر ہے کہ اسے تھوڑا تھوڑا کر کے نمٹاتے رہیے۔ اس کیلئے آپ روز یا کچھ دن مقرر دنوں میں ایک وقت رکھ سکتے ہیں ۔ ایک کام اگر آہستہ آہستہ ہو تا ہے تو زیادہ اچھی طرح پایہ تکمیل کو پہنچتا ہے۔

٭اگر آپ روزانہ کام پر جاتے ہیں تو پہلے سے اپنا لباس ، لنچ بکس اور بریف کیس وغیرہ تیار کر کے رکھ کر کافی وقت بچا سکتے ہیں ۔ روانگی سے قبل اپنی ان چیزوں کو ایسی جگہ رکھنے کی عادت ڈالئے جہان آپ انہیں بھولے بغیر اٹھا سکیں۔

٭اپنے کپڑوں کو Wardroboe / closetمیں اس طرح سے ترتیب کے ساتھ لٹکائیے کہ ہر موقع کے ملبوسات الگ الگ شناخت کئے جاسکیں ۔ایسا کرنے سے آپ پریشانی اور وقت کے ضیاع سے بچ جائیں گے۔

٭جو کام آپ کے ایک فون کرنے سے ہوسکتا ہے تو اس کیلئے آپ کو کسی سے ملاقات کرنے کی ضرورت نہیں ہے لہذا فون کر کے کام کو سرانجام دیجئے اور وقت بچائیے۔

٭اپنے ہر کام کو ڈائری پر نوٹ کریں اور کام پایہ تکمیل تک پہنچ جائے تو اسے کاٹتے جائیے اس طرح سے آپ بغیر بھولے اپنے سارے کام وقت پر کرنے میں کامیاب ہو جائیں گے۔

٭اس بات کی کو شش کریں کہ ایک وقت میں زیادہ سے زیادہ کام ہوتے رہیں یہ وقت بچانے کا سب سے عمدہ طریقہ ہے۔

٭وقت بچانے کا سب سے بڑا ذریعہ یہ ہے کہ آپ گھر کے چھوٹے موٹے کاموں کیلئے کوئی ملازم رکھ لیں ایساکرنے کی صورت میں آپ اپنا کافی وقت بچا سکتے ہیں۔

تحریر: ذوالفقارعلی بخاری
[email protected]
This is an urdu article on time management by Zulfiqar Ali Bukhari

Add new comment

CAPTCHA
This question is for testing whether or not you are a human visitor and to prevent automated spam submissions.
Copyright (©) 2007-2019 Urdu Articles. All rights reserved.
Developed By Solaxim Web Hosting and Development Services
Affiliates: Urdu Books | Urdu Poetry | Shahzad Qais | Urdu Jokes One Urdu| Popular Searches | XML Sitemap Partners: UrduKit | Urdu Public Library

Urdu Articles Is One Of The Largest Collection Of Urdu Articles On Different Topics. You can read articles on topics like parenting, relationship, politics, How to do Things, Shopping Reviews, Life Style, Cooking, Health and Fitness, Islam and Spirituality... You can also submit your articles to get free publicity and fame on your published work. Keep Smiling......