ممبئی بم دھماکوں کے تناظر میں (چور کی داڑھی میں تنکا)۔

Submitted by TeamAdmin on Thu, 11/27/2008 - 09:10

ابھی ممبئی بم دھماکوں کے تمام افراد جو کہ ساری ممبئی میں مختلف جگہوں پر ہیں ، اپنا کام یعنی لوگوں کو یرغمال بنا کر بیٹھے ہوئے ہیں اور جن لوگوں نے یہ سب کیا ان کا کہنا ہے کہ وہ مجاہدین دکن نامی کسی تنظیم سے تعلق رکھتے ہیں، اور بڑے بڑے انٹیلی جنس ادارے بھی ابھی تک کسی نتیجے پر نہیں پہنچے کہ یہ کس گروہ یا کن افراد کی کارروائی ہے؟ لیکن بھارتی میڈیا کے قربان جائوں کہ وہ اپنا کردارجسے ہم سب اچھی طرح جانتے ہیں کہ ’’منہ میں رام رام اور بغل میں چھری‘‘ ، لیکن اس سے بھی بڑھ کر یہ بات کہ جس کی طرف کسی کا دھیان شاید نہیں گیا ہو وہ یہ ہے کہ بھارت اپنا آپ خود ہی ظاہر کر رہے ہیں کہ وہ اصل میں کیا ہیں، بس سمجھنے کیلئے تھوڑا سا ذہن استعمال کرنا ہوگا، جو کہ مجھے یقین ہے کہ دنیا میں کافی لوگ رکھتے ہیں اور اس کا استعمال کرتے ہیں۔ میرا کہنے کا مطلب یہ ہے کہ آج صبح جب بھارتی میڈیا والوں نے دہشت گردوں سے اپنی بات چیت کی ریکارڈنگ میڈیا پر نشر کی تو یہ سن کر بہت حیرانی ہوئی کہ دہشت گرد یہ کہہ رہا ہے کہ ان کا تعلق حیدرآباد دکن سے ہے اور میڈیا کا نمائندہ ان سے یہ پوچھ رہا ہے کہ کہیں یہ حیدرآباد ، کراچی پاکستان والا تو نہیں ہے؟ سمجھنے والے سمجھ سکتے ہیں کہ اس کا کیا مطلب ہے؟ اور کیا مطلب نکالنے کی آرزو کی جارہی ہے؟

اس سے اور تو کیا ثابت ہونا ہے یہ ضرور ثابت ہوتا ہے کہ جسے ’’چور کی داڑھی میں تنکا‘‘ کہا جاتا ہے۔ میں کوئی اتنا سمجھدار یا کوئی بہت بڑا قومی نمائندہ نہیں ہوں، لیکن پھر بھی میں ایک مسلم پاکستانی ہوںاور میرا یہ فرض بنتا ہے کہ میں بھی جو سمجھتا ہوں وہ بیان کروں۔ اگر میں صحیح ہوں تو میری یہ بات دنیا تک ضرور پہنچائی جائے اور اگر میں غلط ہوں تو مجھے صحیح بات سمجھائی جائے۔ میری نظر میں یہ ان کی ایک ایسی فاش غلطی ہے جس کا فائدہ ہمیں اٹھانا چاہیئے اور دنیا کو بتا نا چاہیئے کہ بھارت ہمارے ساتھ زیادتی کرتا رہتا ہے جس کی وجہ سے وہ لوگ خود اپنی نظر میں چور ہیں اور برابر یہ تصور رکھتے ہیں کہ اب پاکستان کی طرف سے اس کا جواب دیا جائے گا۔ 9/11 کا واقعہ اب تو ساری دنیاکے سامنے آ گیا ہے کہ وہ کس کا کام تھا اور کیسے کیا گیا، خود سی آئی اے کی اپنی رپورٹوں سے سب کچھ ثابت ہو تا ہے۔ یہ بھی اسی طرح کا ایک ڈرامہ کھڑا کرنے کی ایک ناکام سازش ہے جس کو پوری طرح بے نقاب کرنے کی ضرورت ہے۔

مجھے یقین ہے کہ اگر ہمارا میڈیا اس بات کو بنیاد بنا کر بھارتی چہرہ بے نقاب کرے تو یقیناً دنیا کو بہت آسانی ہوگی بھارتی سازشیں سمجھنے میں۔ اس کے ساتھ ساتھ میں یہ بھی امید رکھتا ہوں کہ ہماری حکومت بھی اس بات میں میڈیا کے ساتھ کھڑی ہو اور ان کی پوری پوری سپورٹ کرے جیسا کہ دینا کی حکومتیں اپنے اپنے ملکوں میں کرتی ہیں۔

This is an urdu Article by Uzair Shami about mumbai Bomb Blasts on 26 november 2008

Add new comment

CAPTCHA
This question is for testing whether or not you are a human visitor and to prevent automated spam submissions.
Copyright (©) 2007-2019 Urdu Articles. All rights reserved.
Developed By Solaxim Web Hosting and Development Services
Affiliates: Urdu Books | Urdu Poetry | Shahzad Qais | Urdu Jokes One Urdu| Popular Searches | XML Sitemap Partners: UrduKit | Urdu Public Library

Urdu Articles Is One Of The Largest Collection Of Urdu Articles On Different Topics. You can read articles on topics like parenting, relationship, politics, How to do Things, Shopping Reviews, Life Style, Cooking, Health and Fitness, Islam and Spirituality... You can also submit your articles to get free publicity and fame on your published work. Keep Smiling......